چیچہ وطنی میں کشیدگی مسیحیوں کا علاقہ سے انخلاء
چیچہ وطنی(آگاہی نیوز( پنجاب کے شہر چیچہ وطنی میں سخت تناؤاور کشیدگی پھیل گئی ہے۔اس کے نتیجہ میں ڈر و خوف میں مبتلا مسیحیوں نے شہر سے بڑے پیمانہ پر محفوظ مقام پر منتقلی شروع کردی ہے۔ اطلاعات کے مطابق شہر سے نصف کے قریب مسیحی آبادی کا انخلاء ہوچکا ہے۔تفصیلات کے مطابق چیچہ وطنی کے چک 12۔38ایل کے گاؤں میں مسیحیوں اور مسلمانوں کے درمیاں ایک تنازعہ پیدا ہوجانے پر یہ صورتحال سامنے آئی۔کسی نامعلوم شر پسند نے ایک مسلم قبر پر سے ایک سبز رنگت کے کپڑے کے ٹکرے کو جس پر کچھ آیات لکھی ہوئی تھیں اس کو ایک مسیحی کی قبر پر رکھ دیا۔اس بات کو بنیاد بنا کر چند افراد نے مسلمانوں کوتشدد پر اکسایا۔علاقہ کے معززین کی مداخلت اور مسیحیوں کی جانب سے اس پر اظہار افسوس کئے جانے پر معاملہ مزید بگڑنے سے بچ گیا۔ڈی پی اور سید خرم علی شاہ نے واقعہ کی تصدیق کی ہے۔انہوں نے بتایا ہے کہ واقعہ کے بعد علاقہ کے بزرگوں کی بروقت مداخلت پر بڑے تصادم کا خدشہ ٹل گیا ہے۔معاملہ کو خوش اسلوبی سے طے کر لیا گیا ہے۔علاقہ مکینوں نے بتایا ہے کہ مسیحیوں پر حملہ کے خدشات کے پیش نظر متعدد خاندان علاقہ بدر ہوچکے ہیں۔مقامی آبادی نے اس بات پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ ہم گذشتہ پچاس سالوں سے پرامن طور پر ہم آہنگی و بھائی چارے سے رھ رہے ہیں۔ہمارے خلاف یہ کسی کی سازش ہے جس کو ہم ناکام بنائیں گے

Advertisements