واٹسن گل
نیدرلینڈز: 09-02-2014

شہباز بھٹی کے خاندان کو فدایان ءمحمد،تحریک طالبان پنجاب اور لشکر جھنگوی کی جانب سے دی جانے والی دھمکی پر پاکستانی مسیحوں میں زبردست تشویش پائ جاتی ہے۔
article-1362087-0D6F3E52000005DC-422_634x388
سب سے پہلے میں یورپ کی ایک جانی پہچانی سماجی اور سیاسی شخصیت کا بہت مشکور ہوں جن کی وجہ سے مجھے فدایان محمد تحریک طالبان پنجاب و لشکر جھنگوی کی جانب سے بیجھا جانے والادھمکی آمیز خط جو کہ اکمل بھٹی اور سکندر بھٹی کے نام پر ہے موصول ہوا ،پڑھنے کے بعد زہن میں کُچھ سوالات تھے جن کا جواب شہید شہباز بھٹی کے خاندان کا کوئ فرد ہی دے سکتا تھا، میں نے شہباز بھٹی شہید کے بھائ اور کینڈا میں سیاسی اور سماجی طور پر ایک جانا پہچانا نام جناب پیٹر بھٹی صاحب کو فون کیا تو پیٹر بھٹی صاحب نے فون پر بتایا کہ سکندر بھٹی ان کے چھوٹے بھائ ہیں اور اکمل بھٹی بھی رشتے دار ہیں اور تمظیمی امور بھی سمنبھالتے ہیں۔ مزید فرماتے ہیں کہ یہ دھمکی برئراست ان کے خاندان بشمول ڈاکٹر پال بھٹی اور ہر اس شخص کے لیے ہے جو شہید شہباز بھٹی کے قاتلوں کے خلاف آواز اٹھایے گا۔
اس دھمکی میں ان کے خاندان کو شہید شہباز بھٹی کے قتل کی تحقیقات میں مہنہ بند کرنے کو کہا گیا ہے ،ورنہ سنگین نتائج کی دھکمی دی گئ ہے۔ پاکستانی مسیحی کمیونیٹی اندورن اور بیرون پاکستان اس کی شدید مُزمت کرتی ہے، اس سلسلے میں یورپ، برطانیہ، کنیڈا سمیت پاکستان میں شدید ردعمل سامنے آیا ہے۔
برطانیہ کی معروف سماجی شخصیت اور انگریزی اخبار کے کالم نویس (دی نیوز) جناب ناصر سید صاحب نے حکومت پاکستان سپریم کورٹ سے مطالبہ کیا کے شہباز بھٹی کے قتل کے حوالے سے جلد سے جلد انصاف کے تقاضے پورے کیے جایے۔ اور ان کے خاندان کی جان و مال کی حفاظت کو یقینی بنایا جایے۔
ہالینڈ کی مزہبی اور سماجی شخصیت اور نہایت قابل احترام اور لیونگ اسٹون اردو چرچ کے ریورنڈ ندیم دین فرماتے ہیں کہ حکومت پاکستان کو بھٹی خاندان کی حفاظت کو یقینی بنانا چایے۔اور ہم سب اس خاندان کے ساتھ شانہ بشانہ کھڑے ہیں۔
کینڈا سے میرے عزیز دوست لطفی آغا گل اس دھمکی پر اپنے شدید غم و غصہ کا اظہار کرتے ہیں۔
اٹلی میں ہماری کمیونیٹی میں نہایت قابل احترام نام جناب سرور بھٹی جو کہ سیاسی طور پر پورے یورپ میں پہچان رکھتے ہیں اس واقعہ کی مزمت کرتے ہیں اور حکومت پاکستان سے مطالبہ کرتے ہیں کہ پاکستان میں موجود تمام مسیحی لیڈرز کی حفاظت کو یقینی بنایا جائے۔اور ہمارے لیڈروں کو ڈرنا نہیں چاھیے بلکہ شہباز بھٹی کی طرح ڈٹ کر مقابلہ کرنا چاھیے۔

پاکستان سے معروف مسیحی وکیل،انسانی حقوق کی خدمات میں ایک بڑا نام سردار مُشتاق گل جو کہ لیگل اوینجلیکل ایسوسی ایشن ڈویلپمنٹ کے ڈائریکٹر ہیں اس واقیعہ کی پُر زور مزمت کرتے ہیں۔ اور حکومت پاکستان سے مطالبہ کرتے ہیں کہ وہ اس سلسلے میں حفاظتی اقدامات کو یقینی بنایے۔

Advertisements