واٹسن گل،

نیدرلینڈز: 29مئ 2014

ہمارے پاس کسی قسم کے ویزے، اسپانسرشپ یا پھر مالی وسائل موجود نہی ہیں کہ ہم اپنے پاکستانی مسیحی بہن بھائ جو تھائ لینڈ، سری لنکا اور ملیشیا اور دیگر ممالک  میں بہت مشکل میں ہیں ان کی کوئ مدد کر سکیں۔ ہم ان کے حقوق کے بقا کی جنگ لڑ رہے ہیں۔

ہمیں بڑے افسوس سے کہنا پڑے گا کہ ہمیں بہت سی ای میلز، اور فیس بک سے روزانہ کی بنیاد پرانفرادی طور بر  پیغام موصول ہو رہے ہیں۔ جن میں مدد کی درخواست کی جا رہی ہے۔ آج بھی تین مختلف پیغامات دیکھ کر مجھے افسوس ہو رہا ہے کہ ہم اپنے بہبن بھائوں کے لئے کچھ نہی کر پا رہے۔ ان کی ایک بہت بڑی تعداد ہے جو مُشکلات کا شکار ہے۔ کسی کے بچے بیمار ہیں تو کسی کے بزرگ ماں باپ بیمار ہیں۔ ہمارے یہ بہن بھائ اپنا سب کچھ بیچ کر پاکستان چھوڑ چُکے ہیں اور اب نہ واپس جا سکتے ہیں اور نہ آگے کی منزل قریب نظر آ رہی ہے۔ چند دن پہلے اسکایئپ پر ایک بھائ نہ بتایا کہ ان کی ایک بچی زہنی مریض ہے اور وہ ملیشیا میں انتہائ تنگدستی کا شکار ہیں۔ ہمیں پاکستان سے بھی پیغامات مل رہے ہیں کہ بہت سے مسیحی جن پر مقدمات قائم ہیں ، وہ پاکستان سے نکلنا چاہتے ہیں۔

میں بڑی زمیداری اور سچائ سے آپ سب کو یہ بتانا چاہتا ہوں کہ ہماری پوری ٹیم بشمول مجھ سمیت ہمارے پاس کسی بھی قسم کا کوئ ایسا نظام موجود نہی کہ جس سے ہم کسی ایک بھی مسیحی کو پاکستان سے نکال سکیں۔  

میں جانتا ہوں کہ حالات بہت خراب ہیں۔ اور ہم اپنے وسائیل کے دائرے میں جو ممکن ہے کر رہے ہیں۔ اس کے لئے ہماری پوری ٹیم اپنی دیانداری اور محنت سے اپنی آواز کو ہر فورم پر اٹھانے کے لئے پوری طرح سے تیار ہے۔ انصاف کی ممُکناء فراہمی  کے لئے ہم ہر دروازہ کھٹکھٹاینگے۔ ہماری ٹیم میں موجود کمیونیٹی لیڈرز اس جدوجہد کے لئے خراج تحسین کے لائق ہیں۔ جو بغیر کسی مالی مدد کے اپنی مدد آپ کے تحت اس جدوجہد میں شامل ہیں۔ یہ وہ لیڈرز ہیں جو اپنی انفرادی خدمات میں بھی پیش پیش رہے ہیں اور اپنی مسیحی قوم کے لئے اپنی انفرادی پہچان اور اپنی تنظیموں کے باوجود مشترکہ طور پر یک جہتی کے سفر کا آغاز کر چکے ہیں۔ میں یہ سمجھتا ہوں کہ ابھی مظاہرہ 27 جون کو ہے مگر خدا کی قسم ہم نے اتحاد کی صورت میں ہم نے ایک بڑی کامیابی کو حاصل کیا ہے۔ ہماری منزل بھی جلد ہمارے سامنے ہو گی۔ ہماری ٹیم کا ایک ہی مقصد ہے کہ ہم اپنی قوم کو کسی بھی ایک جگہ اکھٹا کر لیں ،اور جب ہم اکھٹے ہونگے تو توقیر اور احترام سے پُر امن طریقے سے اپنے حقوق حاصل کر سکینگے۔

Advertisements