واٹسن سلیم گل،
ایمسٹرڈیم،
20-cases-registered-under-blasphemy
یوروپیئن پارلیمنٹ کی جانب سے پاکستان کو توہین رسالت کے قوانین کو منسوخ کرنے کے مشورے کو پاکستانی مسیحی خوش آیئند قرار دیتے ہیں۔
فرانس کے شہر سٹراسبورخ میں یوروپیئن پارلیمنٹ میں 50 سے زائد یوروپیئن پارلیمنٹ ممبرز نے پاکستان پر زور دیا کہ وہ توہین رسالت کے قوانین کو منسوخ کرنے کے لئے اس کا جائزہ لے اور اس قانون پر سزائے موت کا خاتمہ کیا جائے۔ ممبرز نے پاکستان پر زور دیا کہ وہ مرتد کے لئے بھی سزائے موت پر غور کرے ۔ یہ امتیازی قوانین ہیں جو کہ اقلیتوں کے لئے بے جا استمال ہو رہے ہیں۔ یوروپیئن پارلیمنٹ ممبرز نے خصوصی طور پر آسیہ بی بی کے حوالے سے اپنے خدشات کا اظہار کیا اور کہا کہ وہ خاتون جو کہ پانچ سال سے جیل میں ہے اسے رہا کیا جائے۔ یوروپیئن پارلیمنٹ کے 50 سے زائد ممبرز نے پارلیمنٹ کی خارجی امور کی انچارج فیڈریشیا موغیرینی سے درخواست کی کے وہ پاکستان کی حکومت کو لکھیں کہ وہ آسیہ بی بی پر رحم کریں اور اسے آزاد کریں

Advertisements