انسانیت کی اتنی تزلیل، ترکی کے ساحل پر تین سالہ شامی بچے ایلان کردی کی لاش کی نے اس دنیا کو ہلا کر رکھ دیا ہے۔ واٹسن سلیم گل،

Part-PAR-Par8261894-1-1-0
یہ معصوم بچہ ان دو کشتیوں مین سے ایک کشتی پر سوار تھا جو ترکی سے یونان جا رہی تھی اور پھر ڈوب گئ تھی ۔ تین سالہ ایلان اپنے پانچ سالہ بھائی گیلپ اور ماں ریحان کے ساتھ ڈوب گیا۔ جس کی لاش ترکی کے ساحل سے ملی ہے۔ اس وقت لاکھوں لوگ شام سے یورپ کی جانب ہجرت کر ہے ہیں۔ اور یورپ کو تارکین وطن کے حوالے سے بہت بڑے بحران کا سامنا ہے ۔ مگر یہ عرب ممالک کیا کر رہے ہیں ان سے پوچھنے والا کوئ نہی ہے۔ کیا ان کا کوئ فرض یا زمہ داری نہی ہے۔ صرف اسی سال 3000 ہزار کے لگھ بھگ تارکین وطن بحرہ روم کی خونی موجوں کی خوراک بن گئے ہیں۔

Advertisements