تھائ لینڈ میں پاکستانی مسیحیوں کے  ساتھ ہونے والے مظالم کے خلاف  15 دسمبر کو ہالینڈ میں مظاہرہ کریں گے، پی ڈی سی سی،

تھائ لینڈ میں پاکستانی مسیحیوں کا کوئ پرسان حال نہی ہے۔ چھوٹے چھوٹے بچوں کو جیلوں میں رکھ کر انسانی حقوق کے بین الاقوامی چارٹر کی خلاف ورزی کی جارہی ہے۔ خاندان تتربتر ہو رہے ہیں۔ لوگوں کو سخت مشکلات کا سامنا ہے۔ بیمار ہیں تو دوا نہی ہے۔ بچوں کو خوراک کی کمی کا سامنا ہے۔

جہاں ہم یورپ والے کرسمس کی خوشیوں اور مسرتوں کو سمیٹنے کے لئے تیار ہورہے ہیں وہاں ہمارے مسیحی بہن بھائ کرسمس والے دن جیلوں میں گزارے گے۔

unity is strength

ہالینڈ میں پاکستان کے غیور مسیحی ایک بار پھر اپنے بہن بھائیوں کے لئے اکھٹے ہوئے ہیں اور ایک تحریک کا آغاز کر رہے ہیں۔ جس میں پہلے وہ تھائ لینڈ کی حکومت سے احتجاج کریں گے کہ وہ پاکستانی مسحیوں کو غیر ملکی مہاجر تصور کریں نہ کے مجرموں سا سلوک کریں۔ یہ احتجاج 15 دسمبر کو دوپہر دو بجے دی ہیگ میں تھائ لینڈ کے سفارتخانے کے باہر کیا جائے گا۔ دوسرا قدم ہالینڈ میں مقیم یو این ایچ سی آر کو اس حوالے سے پٹیشن دی جائے گی اور تیسرا قدم جینوا میں یو این ایچ سی آر کا دروازہ کھٹکھٹانا ہے۔

اس احتجاج کے انتظامات کو مکمل کرنے کے لئے ایک اتنظامی امور کی کمیٹی تشکیل دی گئ ہے جس میں گلباز فضل، عظیم مسیح، پاسٹر ایرک سرور، پاسٹر ندیم دین، پاسٹر عمران گل، انجم اقبال، تنویر قربان، سسل جیمس اور واٹسن سلیم گل شامل ہیں۔

اس حوالے سے مضید تفصیل جلد آپ کے سامنے پیش کی جائے گی۔

مضید معلومات کے لئے آپ گُلباز فضل یا واٹسن سلیم گل سے رابطہ کر سکتے ہیں۔

Advertisements